صفدر نے نیب کے اثاثوں کی انکوائری سے قبل گرفتاری ضمانت مانگ لی

 پشاور: پاکستان مسلم لیگ نواز کے رہنما ریٹائرڈ کیپٹن محمد صفدر نے پیر کے روز قومی احتساب بیورو ، خیبر پختون خوا کی اس سے انکوائری کے الزامات کے خلاف گرفتاری سے قبل ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست کی۔


مسٹر صفدر ، جو سابق وزیر اعظم اور مسلم لیگ (ن) کے سپریمو نواز شریف کے داماد ہیں ، نے عدالت میں ضمانت کی درخواست دائر کی تھی کہ ان کے خلاف نیب کی انکوائری بے بنیاد ارادے پر مبنی ہے کیونکہ وہ اس کی مشترکہ تحقیقات کے سامنے پیش ہوا تھا ٹیم نے متعدد مواقع پر تحقیقاتی افسران کے ذریعہ طلب کی گئی تمام معلومات پیش کیں لیکن اس کے بعد بھی چیئرمین نیب کی طرف سے اس کی گرفتاری کے وارنٹ جاری کردیئے گئے۔



انہوں نے کہا کہ وہ مختلف مواقع پر نیب کی تفتیشی ٹیم کے سامنے پیش ہوئے تھے ، جب کہ انہیں ایک سوال نامے کے ساتھ 17 ستمبر 2020 کو کال اپ نوٹس جاری کیا گیا تھا اور انہوں نے تفصیلی جواب کے ساتھ اسے واپس کردیا تھا۔


درخواست گزار کا کہنا تھا کہ انہوں نے کال آؤٹ نوٹس کی تعمیل میں 8 اکتوبر کو پشاور میں نیب کے ریجنل ہیڈ کوارٹر کا دورہ کیا تھا اور ان کی گرفتاری کے وارنٹ جاری کرنے سے متعلق انہیں ایک نوٹس دیا گیا تھا۔

صفدر نے نیب کے اثاثوں کی انکوائری سے قبل گرفتاری ضمانت مانگ لی صفدر نے نیب کے اثاثوں کی انکوائری سے قبل گرفتاری ضمانت مانگ لی Reviewed by Nokriads.com on اکتوبر 13, 2020 Rating: 5

کوئی تبصرے نہیں:

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.